Home / History / تابوتِ سکینہ – مقام ابراھیم اور میرے نبئ کریمﷺ کا سنگِ آستاں

تابوتِ سکینہ – مقام ابراھیم اور میرے نبئ کریمﷺ کا سنگِ آستاں

لوگ جالی چومنے پر اعتراض کرتے ھیں !!!!!!!!!!!!!!!!
محبت میں ماں اپنے بچے کا پیشاب خانہ بھی چوم لیتی ھے ، اور ھم نے بھی اپنے بچوں کے چومے ھیں ،، محبت کسی ضابطے کی پابند نہیں ھے ،میرے نبیﷺ سے متعلق کوئی چیز بھی چومنے میں کوئی حرج نہیں ،، مجھے کوئی بتا دے کہ اس پتھر پہ میرے نبی ﷺ کے قدم مبارک لگے ھیں ،، بخدا میں اسے حجرِ اسود کی نسبت زیادہ محبت سے چوموں گا ،،،،،،،،،، حجر اسود طواف شروع کرنے کے لئے ایک نشانی لگائی گئ ھے ،، جسے نبی کریم ﷺ نے ایک دفعہ چوما ھے اور 6 بار صرف اشارہ کر کے طواف مکمل کیا ھے ،، تابوتِ سکینہ کیا تھا ،جسے فرشتے اٹھا کر لائے تھے ؟ اس میں آل موسی اور آل ھارون کے تبرکات ھی تھے ،، وَقَالَ لَھُم نَبِیُّھُم اِنَّ اٰیَةَ مُلکِہ اَن یَّاتِیَکُمُ التَّآبُوتُ فِیہِ سَکِینَة مِّن رَبِّکُم وَبَقِیَّة مِمَّا تَرَکَ اٰلُ مُوسیٰ وَ اٰلُ ھٰرُونَ تَحمِلُہُ المَلٰئِکَة اِنَّ فِی ذٰلِکَ لاَٰ یَةً لَّکُم اِن کُنتُم مُؤمنین… آل موسی و آلِ ھارون کے بقایاجات میں سکون اور تسکین تھی تو میرے نبی ﷺ کی نشانیوں میں کیوں نہیں ؟ اپنے باپ دادا کے تراث اور کلچر کو محفوظ رکھنے کے لئے پورے پورے مصنوعی شھر بسائے جاتے ھیں ،،، نبیﷺ کے آثار کو توحید کے نام پہ کیوں مٹایا جاتا ھے ؟ مقام ابراھیم کیا ھے ؟ ایک پتھر ، اسے نماز پڑھنے کی جگہ بنانے کا مقصد ؟ واتخذوا من مقامِ ابراھیم مصلی ؟ مقام ابراھیم کو نماز کی جگہ بناؤ،، حجرِ اسود کو کیوں نہ بناؤ ؟ اگر اللہ کو وہ پتھر پیارا ھے جہاں اس کے خلیل کے قدم مبارک لگے ھیں ، تو ھمیں وہ پتھر کیونکر عزیز نہ ھو گا جہاں ھمارے حیبیب کے قدم مبارک لگے ھونگے ؟ ھم جو بتوں سے پیار کرتے ھیں ،،،،،،، نقلِ پروردگار کرتے ھیں

Visit to Read Books and Articles of Dr. Muhammad Hamidullah

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *